PFUJ announces a campaign against impunity in journo killings and economic exploitation of media workers

Islamabad, 16 May 2015: Pakistan Federal Union of Journalists announces a phased campaign to protest against the exploitation of journalists. The campaign includes a plan to stage a hunger strike till death, in front of the parliament and supreme court. 

The plans for the campaign were announced by Bilal Dar, General Secretary of Rawalpindi Islamabad Union of Journalists, during Media Par Nazar, a web-show produced by Media Matters for Democracy. Dar said, that office bearers of the unions from across Pakistan would assemble in Islamabad and stage a hunger strike for the rights of journalists, especially the non-payment of salaries. He said that this strike will continue till death if the demands for rights aren’t met. Dar said that this drastic decision has been made to fight the violations of journalists rights. He said that 99% of the 114 journalists killed in Pakistan haven’t received justice. Complete impunity prevails. Calling this protest a final struggle against violations, Dar highlighted the struggle of PFUJ for the implementation of wage-board awards and the continued economic exploitation of journalists at the hand of media owners.

In the first stage of the protest, an awareness campaign has been launched. Union workers and office bearers would start visiting newsrooms across the country from next week, to share their concerns and charter of demands.

** Watch full episode of Media Par Nazar on 19th May 2015.

اسلام آباد راولپنڈی یونین آ ف جرنیلسٹ کے جنرل سکرٹری، بلال ڈار نے میڈیا میٹرز فار ڈیماکرسی کے پروگرام، میڈیا پر نظر میں، میزبان اسد بیگ سے بات  کرتے ہوئے ہوئے، صحافیوں کے حقوق کے لئے، پی ایف یو جے کی حتمی لڑائی اور بھوک ہڑتال کے فیصلے کا اعلان کیا۔ بلال ڈار کا کہنا تھا کہ

ویج ایوارڈ امپلیمنٹ نہیں ہو رہا، سیلیریز ٹرانسفر نہیں ہو رہیں، پاکستان میں ایک سو چودہ  صحافیوں کی کلنگ ہوئی، نناوئے فیصد صحافیوں کے قاتل گرفتار نہیں ہوئے، یا بے نقاب نہیں ہوئے، یا ان کو سزا نہیں ہوئی۔ ہم ان تمام اشوز کے اوپر، خصوصا سیلیریز کے اشو کے اوپر، ویج بورڈ اوارڈ کے اوپر ایک فائنل لڑائی لڑنے جا رہے ہیں۔ پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹ  کی ایف ای سی نے یہ فیصلہ کیا ہے، کہ ہم پورے پاکستان سے،  ورکرز نہیں، پی ایف یو جے اور پریس کلب کے لیڈرز، عہدے دار، ہنگر سٹرائک کریں گے، ٹل ڈیتھ۔ اور وہ ہنگر سٹرائک ایسے ہوگی کہ ہر بندہ اپنے اپنےایریا سے نکلے گا، پورے پاکستان سے نکلے گے، کفن پہن کر۔ سیکنڈ فیز میں، پارلیمنٹ اور سپریم کورٹ  کے سامنے ہنگر سٹرائک شروع ہوگی، اس میں ہم نے  کم سے کم ٹارگٹ رکھا ہے کہ ، ایک سووالنٹیئر شامل ہونگے۔ میں یہ جانتا ہوں اچھی طرح سے، کہ ہم جس دن بیٹھیں گے، میڈیا اونرز ہماری کوئی خبر نہیں دیں گے، ہم سوشل میڈیا کے اوپر اس کی لڑائی لڑیں گے۔ پہلے دن ہماری خبر نہیں ہوگی، لیکن جب دوسرے دن، ہنگر سڑائک کے اندر، پندرہ سے بیس لوگوں کو جب ڈرپیں، لگیں گی، تو یہ انٹرنیشنل اشو بن جائے گا۔ 

Sadaf Khan

Leave a Reply